Wednesday May 22, 2024

تحریک انصاف کے کارکن گھروںپر بھی حملے کر سکتے ہیں۔۔عمران خان نے حیران کن دھمکی دے ڈالی

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک ) تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ نواز شریف کو بچانے کیلئے پارلیمنٹ کو عدلیہ کیخلاف استعمال کیا تو سڑکوں پر نکلیں گے،نواز شریف کو سپریم کورٹ میں صفائی کا جتنا موقع ملا اتنا کسی شہری کو نہیں ملا،میں نے سرکاری ہیلی کاپٹر ایک منٹ کیلئے بھی استعمال نہیں کیا،ہیلی کاپٹر کے پیسے تحریک انصاف دیتی

ہے،نیب دیکھے پنجاب کے ہیلی کاپٹرز کہاں کہاں استعمال ہوئے ،سینیٹ الیکشن کیلئے بولیاں لگی ہیں ،ہمیں ایک سیٹ کیلئے40کروڑ کی پیشکش ہوئی،ہمارے لوگ نہیں بکیں گے۔پشاور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ نواز شریف اور مسلم لیگ(ن) نے عدلیہ پر حملہ کیا تھا، 1998 میں سپریم کورٹ کے کوئٹہ بنچ پر پیسہ چلا تھا۔ اب وہ سپریم کورٹ کے خلاف پارلیمنٹ کو استعمال کررہے ہیں، وہ ایک ادارے کو دوسرے کی تباہی کے لیے استعمال کررہے ہیں، سپریم کورٹ نے نواز شریف کو بہت موقع دیا، انہیں عدالت میں صفائی کا جتنا موقع ملا اتنا کسی شہری کو نہیں ملا۔انھوں نے کہا کہ اگر نواز شریف کو بچانے کیلئے پارلیمنٹ کو عدلیہ کیخلاف استعمال کیا گیا تو ہم عدلیہ کو بچانے کے لیے سڑکوں پر نکلیں گے،پھر یہ نہ کہنا عمران خان کیوں احتجاج کر رہا ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ شریف خاندان کو ڈر ہے کہ نیب عدالت سے ان کے خلاف فیصلہ آنے والا ہے، اگر پارلیمنٹ کو انہوں نے استعمال کیا تو اس بار پاکستان کی عدلیہ کے لئے لوگوں کو نکالوں گا۔خیبر پختونخوا حکومت کے ہیلی کاپٹر اپنے استعمال میں رکھنے سے متعلق معاملے پر تحریک انصاف کے چیئرمین نے کہا

کہ عوام کے پیسے عوام پرخرچ کرنے چاہئیں، میں نہیں چاہتا کہ عوام کا پیسہ اپنے استعمال میں لاؤں، ایک گھنٹہ تو کیا میں نے سرکاری ہیلی کاپٹر ایک منٹ کیلئے ذاتی مقاصد کیلئے استعمال نہیں کیا۔جہاں صوبائی حکومت اپنے منصوبوں کے وزٹ کیلئے لے جاتی تھا وہاں جاتا تھا ۔میں آج بھی ہیلی کاپٹر پر آیا ہوں اس کا خرچہ پارٹی اٹھاتی ہے ۔خیبر پختونخوا حکومت کا ہیلی کاپٹر کبھی اپنی ذات کے لیے استعمال نہیں کیا، نواز شریف بتائیں کیا مریم نواز اور ان کے بچوں کے لیے مسلم لیگ(ن)کا جہاز نہیں استعمال کیاگیا۔نیب دیکھے پنجاب کے ہیلی کاپٹرز کہاں کہاں استعمال ہوئے۔عمران خان نے کہا کہ سرکاری خرچے پر ٹھہر سکتا ہوں لیکن جب بھی نتھیا گلی ٹھہرا اپنے خرچے پر ٹھہرا ، خوف خدا ہے اس لیے اپنا ایک ایک روپیہ خرچ کرتا ہوں۔ ۔ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ سینیٹ الیکشن کیلئے بولیاں چل رہی ہیں ۔ہمیں ایک سیٹ کے بدلے 40کروڑ کی پیشکش ہوئی ہے جسے ٹھکرا دیا ہے ۔ہمارے لوگ نہیں بکیں گے۔ہم نے خیبر پختونخوا سے 6 سینیٹرز نامرد کئے ہیں اور ہمارے تمام ارکان ان کے ساتھ کھڑے ہیں۔ کارکنوں کی جانب سے یہ بھی کہا جارہا ہے کہ اگر کوئی ایم پی اے بکا تو ان کے گھروں پر حملہ بھی کرسکتے ہیں۔انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ انتخابات میں کرپشن کی روک تھام کیلئے ہمیں انتخابات کا طریقہ کار تبدیل کرنا ہوگا تاکہ ہم ان الیکشنز میں ہونے والی جعلسازیوں اور کرپشن کو روک سکیں۔

FOLLOW US