Monday July 15, 2024

سال نو مبارک

لبوں پہ دعا ھے سدا یہ خدا سے
سلامت رھے وطن ہر اک بلا سے

نیا دن نیا سال اس کی جبیں پر

چمکتا رھے بن کے سورج حسیں تر
مبارک نئے سال کی ہر کرن ھو

منور در وبام ہر اک چمن ھو

نہ پلکوں پہ ہوں غم کے کوئی ستارے
نہ ادھورے رہیں خواب کوئی ہمارے

دعا ھے خدا سے خلوص ندا سے
اخوت محبت رگ – جاں بسا دے

الہی محبت دلوں میں جگا دے
امن و آتشی کا شجر اک کھلا دے

وطن کے بشر کا ایک اک ستارہ
فروزاں رھے فلک پر ہی ھمارا

الہی رحمتوں کی ہر جا جھڑی ہو
راہ زندگی کی نہ کوئی کڑی ہو

رہیں سب رنج و غم سدا اب پرے ہی
عدو کے عزائم رہ جائیں دھرے ہی

معین عروج پہ ہو نیا سال اپنا
جہاں میں رھے راج ہر حال اپنا

Poet: معین فخر معین
By: معین فخر معین, کراچی

FOLLOW US